Official Web

انسداد پولیو مہم۔صوبائی دارلحکومت پشاور میں 11 جنوری 2021سے سات روزہ انسداد پولیو مہم شروع کی جا رہی ہے جس میں 745863بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائے جائیں گے۔ڈپٹی کمشنر پشاورمحمد علی اصغر

صوبائی دارلحکومت پشاورمیں ضلعی انتظامیہ کی زیر نگرانی 11 جنوری 2021 سے سات روزہ انسداد پولیو مہم شروع کی جا رہی ہے اس حوالے سے ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر کی زیر صدار ت انسداد پولیوکے حوالے سے اہم اجلاس منعقد ہوا جس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر اشفاق خان،ای او سی کوائرڈینیٹر عبدالباسط،سپرانٹنڈنٹ آف پولیس (سیکیورٹی)عتیق شاہ، اسسٹنٹ کمشنر (سٹی) ڈاکٹر احتشام الحق، اسسٹنٹ کمشنر (صدر) عبید ڈوگر، اسسٹنٹ کمشنر (شاہ عالم) ثوبیہ حسام طورو، ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر عنایت اللہ خان، این سٹاپ آفیسر ڈاکٹر نیئر جمال سمیت ضلعی انتظامیہ، محکمہ صحت، ڈبلیو ایچ او اور دیگر محکوں کے افسران نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ اجلاس میں ڈپٹی کمشنر پشاور کو انسداد پولیو مہم کے حوالے سے تفصیل سے بریفنگ دی گئی۔ اس مہم کے دوران پشاور بھر میں 745863بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائیں جائیں گے جس کے لیے 2471ٹیمیں پشاور کے مختلف علاقوں میں بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائیں گی اور ان ٹیموں کی سیکیورٹی کا بھی خاطر خواہ بندوبست کیا گیا ہے۔ ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر نے والدین سے اپیل کی ہے کہ اپنے بچوں کو مستقل معذوری سے بچانے کے لیے پولیو سے بچاؤ کے قطرے ضرور پلائیں اور پولیو ٹیموں سے تعاون کریں تاکہ پشاور سے پولیو وائرس کا خاتمہ کیا جا سکے۔ انھوں نے کہا کہ ہمیں پولیو کے خاتمے کے لیے اپنا کردار ادا کر نا ہو گا اور ہماری مشترکہ کوششوں سے ہی پولیو کا خاتمہ ممکن ہو سکے گا۔