Official Web

9 مئی ریاست، افواج پاکستان اور آرمی چیف جنرل عاصم منیر کیخلاف بغاوت تھی: وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم شہباز شریف نے کہا ہےکہ 9 مئی کی سازش پاکستانی ریاست کے ساتھ افواج پاکستان اور آرمی چیف جنرل عاصم منیر کے خلاف بغاوت تھی اور شکر ہے سازش دم توڑ گئی۔

وفاقی کابینہ کے خصوصی اجلاس سے اظہار خیال کرتے ہوئے وزیراعظم شہباز شریف کا کہنا تھا 9 مئی کو شہدا کی یادگاروں پر خوفناک حملے ہوئے، کابینہ اجلاس کا مقصد یہی ہے کہ ایوان قوم کی ملکیت ہے اور آپ کے حقوق کی ترجمانی کا مرکز ہے، پوری قوم کو یکسوئی اور اتحاد کے ساتھ پیغام دیتے ہیں کہ اپنے شہدا، ہیروز اور ان کے اہل خانہ کو یاد رکھیں گے۔

شہباز شریف کا کہنا تھا مئی 2023 میں پی ڈی ایم حکومت ملک کو ڈیفالٹ ہونے سے بچانے کی کوشش میں لگی تھی، پی ڈی ایم کی حکومت 190 ملین پاؤنڈ کے معاملے کا نوٹس نہ لیتی تو شاید یہ حملے نہ کیے جاتے، 190ملین پاؤنڈ میں بددیانتی کا نوٹس نہ لیا جاتا تو شاید یہ حملے نہ ہوتے، شاید یہ حملے نہ ہوتے اگر چیف الیکشن کمشنر کا آفس فارن فنڈنگ کا نوٹس نہ لیتا، یہ حملے شاید نہ ہوتے تو اگر ایک کٹھ پتلی حکومت کو نہ ہٹایا جاتا۔

وزیراعظم نے کہا کہ آج کے دن یہ بات رکھنی چاہیے کہ 9 مئی کے یہ حملے کیوں کیے گئے، 9 مئی کی سازش پاکستانی ریاست کے ساتھ افواج پاکستان اور آرمی چیف جنرل عاصم منیر کے خلاف بغاوت تھی، شکر ہے سازش دم توڑ گئی، جس طرح سے جتھے حملہ آور ہوئے کوئی اس کو برداشت نہیں کر سکتا، شاید یہ حملے نہ ہوتے اگر پی ڈی ایم حکومت خانہ کعبہ کے ماڈل والی گھڑی بیچنے کا نوٹس نہ لیتی۔

وزیراعظم نے کہا کہ ایسے فسادیوں کو قانون نے اپنی گرفت میں لیا، کوئی ملک اپنے ہیروز اور شہدا کے خلاف بدترین زبان برداشت نہیں کر سکتا۔

وزیراعظم نے سوال کیا کہ ایک سال گزرنے کے باوجود اب تک نو مئی کے مجرموں کو سزا نہیں ملی پوری قوم ہم سے اور وہ ادارے جن کی ذمہ داری ہے ان سے سوال پوچھتی ہے۔