Official Web

کراچی میں تیز بارش کا امکان نہیں، سسٹم کے پی اور پنجاب میں داخل ہورہا ہے: چیف میٹرولوجسٹ

محکمہ موسمیات کا کہنا ہےکہ کراچی میں زیادہ تیز بارش کا امکان نہیں ہے، بلوچستان سے سسٹم پنجاب اور خیبرپختونخوا میں داخل ہورہا ہے

محکمہ موسمیات نے سندھ کی ساحلی پٹی پر آج اور کل ہلکی سے متعدل شدت کی بارش کی پیشگوئی کی ہے۔

کراچی کے مختلف علاقوں ٹاور، آئی آئی چند ریگر روڈ اور دیگر علاقوں میں صبح سویرے بوندا باندی ہوئی ہے۔

ماہرین موسمیات کا کہنا ہے کہ کراچی میں 15 سے 40 ملی میٹر بارش ہوسکتی ہے۔

دوسری جانب چیف میٹرولوجسٹ سردار سرفراز کے مطابق بلوچستان کے مختلف علاقوں میں بارش جاری ہے جب کہ کراچی میں زیادہ تیز بارش کا امکان نہیں ہے، بلوچستان سے سسٹم پنجاب اور خیبرپختونخوا میں داخل ہورہا ہے ، پنجاب اور خیبرپختونخوا کے مختلف علاقوں میں تیز بارش کا امکان ہے۔

سردار سرفراز نے بتایا کہ بلوچستان کے ساحلی علاقوں سے شدید بارش کی رپورٹ آرہی ہے، صوبے میں کہیں کہیں موسلا دھار بارش ہورہی ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق آج کراچی میں ہلکی بارش اور بوندا باندی کا امکان ہے،24 گھنٹوں کےدوران مطلع ابر آلود رہنے اورگرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے، اس دوران کہیں ہلکی سے درمیانی اور کہیں تیز بارش ہوسکتی ہے۔

محکمہ موسمیات کا بتانا ہے کہ شہر میں کم سے کم درجہ حرارت 26.5ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا  جب کہ زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 30 سے 32 ڈگری سینٹی گریڈ رہ سکتا ہے، کراچی میں ہوا میں نمی کا تناسب78 فیصد ہے جب کہ جنوب مغرب سےچلنےوالی ہواکی رفتار 14 کلومیٹر فی گھنٹہ ہے۔

رین ایمرجنسی نافذ

دوسری جانب میئر کراچی بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے رین ایمرجنسی نافذ کردی ہے جس کے بعد واٹر کارپوریشن نے مختلف اہم شاہراہوں پر سکشن مشینیں بھیج دی ہیں۔

 

سی او او واٹر کارپوریشن کا کہنا ہے کہ بارش کے پانی کی مکمل نکاسی تک عملہ سڑکوں پر رہے گا۔

ادھر  بلوچستان میں پسنی، اورماڑہ، جیونی گوادر، نوشکی، نوکنڈی اور بارکھان میں بارش سے نشیبی علاقے زیر آب آگئے، بارش سے فصلوں اور باغات کو نقصان پہنچا ہے۔

خیبر پختونخوا کے ضلع پارا چنار میں بھی طوفانی بارشوں سے کچے مکانات گرگئے۔