Official Web

آزاد کشمیر ہائیکورٹ نے ن لیگ، پی ٹی آئی اور پیپلز پارٹی کی رجسٹریشن منسوخ کردی

مظفرآباد: آزاد کشمیر ہائی کورٹ نے بڑا فیصلہ سناتے ہوئے ن لیگ، پی ٹی آئی اور پیپلز پارٹی سمیت تمام سیاسی جماعتوں کی رجسٹریشن کو غیر آئینی و غیر قانونی قرار دے دیا اور بلدیاتی کونسلرز کو جاری تمام نوٹسز منسوخ کر دیے۔

آزاد کشمیر ہائی کورٹ نے اپنے فیصلے میں قرار دیا کہ آ زاد کشمیر کی سیاسی جماعتیں قانون کے مطابق رجسٹرڈ نہیں ہیں لہذا انہیں یہ اختیار نہیں ہے کہ وہ کسی بھی شخص کو نوٹس جاری کریں۔ اپنے فیصلے میں آزاد کشمیر ہائی کورٹ نے قرار دیا کہ سیاسی جماعتوں نے رجسٹریشن ایکٹ کی خلاف ورزی کی۔

عدالت عالیہ نے الیکشن کمیشن پر سخت برہمی کا اظہار بھی کیا اور کہا کہ آئندہ غیرقانونی رجسٹریشن نہ کی جائے کیونکہ آزاد کشمیر کے قانون میں عبوری رجسٹریشن کا کوئی تصور موجود نہیں، الیکشن کمیشن آئین کے بغیر کسی سیاسی جماعت کو رجسٹریشن نہیں دے سکتا تھا۔
واضح رہے کہ آزاد جموں و کشمیر الیکشن کمیشن نے سیاسی جماعتوں کو عبوری رجسٹریشن دی تھی، ہائی کورٹ میں مختلف رٹیں دائر کی گئی تھی جن میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ سیاسی جماعتیں کونسلرز کو نوٹسز جاری نہیں کرسکتیں۔

مسلم لیگ (ن)، تحریک انصاف اور پیپلز پارٹی نے بلدیاتی انتخابات کے بعد چیئرمین ضلع کونسل اور دیگر کے الیکشن میں جماعتی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے پر بہت سے کونسلر کو نوٹس جاری کیے تھے جس پر متاثرہ کونسلر نے آزاد کشمیر ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا۔

%d bloggers like this: