Official Web

پی ٹی آئی نے پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کیخلاف کیس میں اضافی دستاویزات جمع کرا دیں

اسلام آباد: تحریک انصاف نے پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کیخلاف کیس میں اضافی دستاویزات سپریم کورٹ میں جمع کرا دیں۔

تحریک انصاف نے دستاویزات میں عدالت سے استدعا کی ہے کہ اضافی دستاویزات کو کیس ریکارڈ کا حصہ بنایا جائے۔

عدالت عظمی میں جمع کروائی گئی دستاویزات میں تحریک انصاف کا کہنا ہے کہ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ عدلیہ کی آزادی کیخلاف ہے، آئین میں پارلیمنٹ اور ایگزیکٹو کے اختیارات واضح ہیں، پی ڈی ایم حکومت نے سپریم کورٹ کے متوازی نظام قائم کرنے کی کوشش کی، آئین میں سپریم کورٹ اور چیف جسٹس کے بھی اختیارات واضح ہیں۔

پی ٹی آئی نے کہا کہ بنیادی حقوق اور عدلیہ کی آزادی کیخلاف قانون سازی برقرار نہیں رکھی جاسکتی، سپریم کورٹ رولز 1980 کی موجودگی میں عدالت عظمی سے متعلق قانون سازی نہیں کی جا سکتی۔

واضح رہے کہ پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کیخلاف کیس کی سماعت کل ہوگی اور چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی سربراہی میں فل کورٹ کیس کی سماعت کرے گا۔