Official Web

نیب ترامیم کالعدم ہونے کے بعد احتساب عدالتوں میں مزید ریفرنسز کا ریکارڈ پیش

راولپنڈی، اسلام آباد: نیب ترامیم کالعدم قرار دیے جانے کے فیصلے پر عمل درآمد جاری ہے جب کہ احتساب عدالتوں میں ریکارڈ جمع کروانے کا سلسلہ تیز کردیا گیا ہے۔

راولپنڈی احتساب عدالت میں 13 نیب ریفرنسز کا ریکارڈ پیش کر دیا گیا ہے جب کہ عدالت نے بقیہ 9 ریفرنسز کا مکمل ریکارڈ کل ہفتے کے روز طلب کرلیا۔ مکمل 22 ریفرنسز کا ریکارڈ پیش ہونے پر تمام ریفرنسز ری اوپن ہوں گے۔

عدالت نے کل ہفتہ 23 ستمبر کو ریفرنس اوپن کرنے اور ملزمان کو نوٹس جاری کرنے کی درخواست سماعت کے لیے مقرر کرلی۔ نیب پراسیکیوٹر سردار طاہر کے مطابق ہم تمام بقیہ 9 ریفرنسز کا ریکارڈ آج ہی جمع کرا دیں گے۔
دوسری جانب اسلام آباد کی احتساب عدالتوں میں زیر سماعت 80 ریفرنسز کا ریکارڈ جمع کروانے کا سلسلہ آج بھی جاری رہے گا ۔ نیب کی جانب سے گزشتہ روز 26 ریفرنسز کا ریکارڈ احتساب عدالت میں جمع کروا دیا گیا تھا۔

ذرائع کے مطابق 20 سے زائد ریفرنسز کا ریکارڈ آج جمع کرائے جانے کا امکان ہے۔ گزشتہ روز جمع کروائے گئے ریفرنسز میں سابق وزرائے اعظم یوسف رضا گیلانی، راجا پرویز اشرف کےریفرنسز کا ریکارڈ بھی شامل تھا۔ علاوہ ازیں فرزانہ رااہ،روبینہ خالد سمیت دیگر ریفرنسز کا ریکارڈ بھی عدالت میں جمع کروایا گیا۔ عدالت نے ملزمان کو سمن جاری کرتے ہوئے طلب کرلیا ہے۔

نیب کی جانب سے یوسف رضا گیلانی،نواز شریف اور آصف زرداری کے خلاف توشہ خانہ ریفرنس کا ریکارڈ جمع کروائے جانے کا بھی امکان ہے۔ ذرائع کے مطابق نیب کی جانب سے جمع کروائے گئے ریکارڈ کی جانچ پڑتال کے بعد نوٹس جاری کیے جائیں گے۔

%d bloggers like this: