Official Web

چینی صدر نے مقامی سطح پر تیار کردہ کووڈ ویکسین لگوا لی

چین کے صدر شی جن پنگ اور  دیگر اعلیٰ شخصیات کو مقامی سطح پر تیار کردہ کووڈ ویکسین لگا دی گئی۔

چین میں اعلیٰ سیاسی شخصیات کی صحت کے حوالے سے خبریں عموماً عوام اور میڈیا سے پوشیدہ رکھی جاتی ہیں۔

تاہم برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق چینی حکام کی جانب سے اس خبر کو عوامی سطح پر جاری کرنے کا مقصد ملک میں کورونا کیسز کی شرح میں اضافے کے باعث بوسٹر ڈوز کی مہم کو فروغ دینا ہے۔

چین کے نیشنل ہیلتھ کمیشن کے نائب سربراہ زینگ یکسن کا کہنا ہے کہ اعلیٰ حکام کو کورونا کی ویکسین لگنے کا مطلب ہے کہ چین کی اعلیٰ قیادت مقامی سطح پر تیار کی گئی ویکسین سے مطمئن ہیں۔

یاد رہے کہ چین نے کورونا کے حوالے سے زیرو ٹالرنس پالیسی اپنا رکھی ہے، ملک میں بڑے پیمانے پر کورونا ٹیسٹنگ اور آئسولیشن پر سختی سے عمل درآمد کروایا جاتا ہے جبکہ زیادہ کورونا کیسز والے علاقوں میں لاک ڈاؤن نافذ کر دیا جاتا ہے۔

رواں برس اپریل میں بھی چین کے شہر شنگھائی میں کورونا کیسز بڑھنے پر 2 ماہ کے لیے لاک ڈاؤن نافذ کر دیا گیا تھا۔

جان ہاپکنز یونیورسٹی کے اعداد و شمار کے مطابق دنیا میں کورونا وبا شروع ہونے کے بعد سے چین میں اب تک 21 لاکھ 67 ہزار 619 کورونا کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں جبکہ 14 ہزار 647 افراد زندگی کی بازی ہار چکے ہیں۔

%d bloggers like this: